ویب سائٹ دفتر رہبر معظم انقلاب اسلامی

مِلک کو اس شرط پر بیچنا کہ خریدار سے دوبارہ زیادہ قیمت پر خود

س: بعض لوگ اپنى بعض جائيداد کو فروخت کرتے ہيں تاکہ دوبارہ زيادہ قيمت پر اسى چيز کو خريد ليں کيا يہ خريد و فروخت صحيح ہے؟
ج: اس جيسا بناوٹى معاملہ کيونکہ سود کے حصول کے لئے حيلہ کے طور پر انجام ديا جاتاہے لذا حرام اور باطل ہے ہاں، اگر شرعى طور پر صحيح اور حقيقى طور پر اپنے مال کو فروخت کرے اور پھر (کسى وجہ سے) دوبارہ اسے نقد يا ادھار خريدنے پر تيار ہو جائے چاہے اسى قيمت پر خريدے يا زيادہ قيمت اداکرے تو جائز ہے۔
 
700 /