ویب سائٹ دفتر رہبر معظم انقلاب اسلامی

ضروریات زندگی پر خمس نہ ہونے کا معیار

س: کيا سال کے کاروبارى منافع ميں سے حاصل شدہ اموال کے اخراجات زندگى ميں خمس کے واجب نہ ہونے کا معيار يہ ہے کہ اس کو سال کے اندر ہى استعمال ميں لايا جائے يا اس سال ميں ان کى ضرورت ہونا ہى کافى ہے خواہ ان کو استعمال کرنے کا کوئى موقع نہ بھى ملے؟
ج: کپڑے، فرش وغيرہ جيسى اشياءکہ جن سے استفادہ کرنے کے باوجود وہ باقى رہتى ہيںان ميں خمس کے واجب نہ ہونے کا معيار صرف ان کى ضرورت ہونا ہے۔ ليکن روزمرہ کى ضروريات زندگى جيسے چاول، گھى وغيرہ تو ان کا معيار سال کے اندر ان کا خرچ ہونا ہے، لہذا ان ميں سے سال کے خرچ سے جو کچھ بچ جائے اس ميں خمس واجب ہے۔
 
700 /